بدھ‬‮   19   جون‬‮   2024
 
 

بھارت کو تاریخی جھٹکا ، کینیڈا میں وزیر اعظم ٹروڈو کی خالصتانی جھنڈوں ساتھ نگر کیرتن میں شرکت

       
مناظر: 954 | 3 May 2023  

اسلام آباد (نیوز ڈیسک)  پنجاب میں امرت پال سنگھ کی گرفتاری کے بعد بیرون ملک خالصتان کے حامی مزید سرگرم ہوگئے ہیں۔ وزیر اعظم نریندر مودی نے کینیڈا میں ہندوستان مخالف واقعات کے بعد خالصتان کی حمایت کرنے والوں کے خلاف کارروائی کا مطالبہ اٹھایا تھا لیکن کینیڈین وزیر اعظم جسٹن ٹروڈو اسے بار بار نظر انداز کر رہے ہیں۔ کینیڈا کے ٹورنٹو اور اونٹاریو شہروں میں خالصہ یوم تاسیس کے موقع پر 30 اپریل کو نگر کیرتن نکالا گیا جس میں کینیڈا کے وزیر اعظم ٹروڈو خاص طور پر پہنچے۔ اس پروگرام میں وزیر اعظم ٹروڈو کا خالصتانی جھنڈوں سے استقبال کیا گیا۔ خاص بات یہ ہے کہ نگر کیرتن میں یہ جھنڈے وزیر اعظم ٹروڈو کے ساتھ ساتھ بھی چلے ۔
وزیر اعظم جسٹن ٹروڈو کے اس قدم کے ساتھ ہی خالصتان کے حوالے سے ان کا رویہ صاف نظر آ رہا ہے کہ وہ اس تحریک کو بڑھاوا دے رہے ہیں۔ ساتھ ہی خالصتان کے حامی بھی اس کا فائدہ اٹھا رہے ہیں۔ انہوں نے کھل کر وزیراعظم ٹروڈو کے خالصتان کے حق میں آنے کی بات شروع کر دی ہے۔ کینیڈا کے وزیر اعظم جسٹن ٹروڈو نے اتوار کو ٹورنٹو میں سات سال کے وقفے کے بعد بیساکھی نگر کیرتن میں شرکت کی۔ اس دوران، وزیر اعظم نے ٹورنٹو شہر کے ناتھن فلپس اسکوائر پر جمع بھیڑ سے بھی خطاب کیا۔ تاہم، ان کا خطاب صرف چار منٹ تک جاری رہا۔ہرجیت سجن اور عمر الگبارا اور دیگر کابینہ کے وزرا ء نے بھی پی ایم کے ساتھ بیساکھی نگر کیرتن پروگرام میں شرکت کی۔ ٹروڈو نے بیساکھی نگر کیرتن میں کہا کہ مجھے یاد ہے کہ میں نے کچھ سال پہلے ٹورنٹو خالصہ ڈے پریڈ میں شرکت کی تھی۔
اس کے بعد یہاں ٹورنٹو، اونٹاریو اور پورے ملک میں بیساکھی کی تقریبات میں جانا میرے لیے ہمیشہ خوشی کی بات ہے۔ اس تقریب میں پی ایم اور ان کے کابینہ کے ساتھیوں کے ساتھ – ساتھ گریٹر ٹورنٹو کی اہم شخصیات اور جی ٹی اے کی لبرل پارٹی کے اراکین پارلیمنٹ نے شرکت کی۔ غور طلب ہے کہ ٹروڈو آخری بار 2017 میں ٹورنٹو خالصہ ڈے کی تقریبات میں موجود تھے۔ امرت پال سنگھ کے خلاف پنجاب اور ہندوستان کی حکومت کی کارروائی کے بعد خالصتانی حامیوں نے امریکہ، برطانیہ اور کینیڈا میں ہندوستانی سفارت خانے کے باہر احتجاج کیا۔ اس دوران سفارتخانے کے عملے کے ساتھ بدتمیزی بھی کی گئی۔ جس کے بعد حکومت ہند نے کینیڈا کی حکومت سے سخت رویہ اپنانے کو کہا تھا لیکن اس کے باوجود وزیر اعظم ٹروڈا کا خالصتان کی حمایت میں آنے سے ہندوستان اور کینیڈا کے تعلقات متاثر ہوسکتے ہیں۔
برطانیہ میں آزاد مشیر کولن بلوم کی بلوم ریویو رپورٹ نے پہلے ہی برطانیہ اور ہندوستانی حکومت کو پریشان کر رکھا ہے۔ بلوم رپورٹ میں واضح طور پر کہا گیا ہے کہ خالصتانی حامیوں نے برطانیہ کے بڑے گرودواروں پر قبضہ کر رکھا ہے اور وہاں سے جمع ہونے والی رقم کو غلط طریقے سے استعمال کیا جا رہا ہے۔ کینیڈا کا بھی یہی حال ہے۔ وہاں کے اکثر گوردواروں میں خالصتان کی حمایت میں پروپیگنڈا کیا جا رہا ہے۔ اب کینیڈین وزیراعظم کا بھی ان کی حمایت کرنا ہندوستان کے لیے لمحہ فکریہ ہے۔

مقبوضہ کشمیر میں بھارت کی انسانیت دشمنی کی تفصیل
From Jan 1989 till 29 Feb 2024
Total Killings 96,290
Custodial killings 7,327
Civilian arrested 169,429
Structures Arsoned/Destroyed 110,510
Women Widowed 22,973
Children Orphaned 1,07,955
Women gang-raped / Molested 11,263

Feb 2024
Total Killings 0
Custodial killings 0
Civilian arrested 317
Structures Arsoned/Destroyed 0
Women Widowed 0
Children Orphaned 0
Women gang-raped / Molested 0