جمعرات‬‮   23   مئی‬‮   2024
 
 

بھارت کا جنگی جنون ، انڈیا دھڑا دھڑ خطرناک اسلحہ درآمد کرنے لگا

       
مناظر: 648 | 4 Feb 2023  

ممبئی (نیوز ڈیسک ) انڈیا نے گذشتہ پانچ برسوں کے دوران مختلف ممالک سے تقریباً 24 ارب ڈالرز کا فوج سازوسامان درآمد کیا ہے۔
’ٹائمز آف انڈیا‘ کے مطابق جمعے کو انڈیا کے جونیئر وزیر برائے دفاع اجے بھٹ نے پارلیمنٹ کو بتایا کہ گذشتہ پانچ برسوں کے دوران انڈیا نے امریکہ، روس، فرانس، اسرائیل اور سپین سمیت دیگر ممالک سے تقریباً 24 ارب ڈالر کا فوجی ساز و سامان درآمد کیا ہے۔
درآمد کیے گئے سامان میں ہیلی کاپٹرز، ایئرکرافٹ ریڈارز، راکٹس، بندوقیں، میزائل اور رائفلز شامل ہیں۔
جونیئر وزیر برائے دفاع اجے بھٹ نے پارلیمنٹ کو بتایا کہ ’2017 سے لے کر اب تک انڈیا نے غیرملکی کمپنیوں کے ساتھ فوجی سازوسامان کی درآمد کے لیے 88 معاہدے کیے جبکہ گذشتہ پانچ برسوں کے دوران فوجی سازوسامان حاصل کرنے کے لیے مجموعی معاہدوں کی تعداد 264 تھی۔‘
اجے بھٹ کا کہنا تھا کہ ’انڈین حکومت درآمدی سامان پر انحصار کو کم کرنے کے لیے ’میڈ ان انڈیا‘ کی پالیسی پر عمل پیرا ہے اور اس پالیسی میں مزید اصلاحات کی جا رہی ہیں۔‘
’انڈیا کی ’ڈیفنس ریسرچ اینڈ ڈویلپمنٹ آرگنائزیشن‘ اس وقت 55 منصوبوں پر کام کر رہی ہے جس کے تحت آبدوزوں میں استعمال ہونے والی ٹیکنالوجی، لڑاکا جہاز، کروز میزائلوں، ڈرونز اور ٹینک کش ہتھیار بنائے جا رہے ہیں۔‘
ٹائمز آف انڈیا کے مطابق ’فوجی و دفاعی صلاحیتوں کو بڑھانے کے لیے رقم خرچ کرنے والے ممالک میں انڈیا کئی ممالک بشمول روس اور برطانیہ سے بھی آگے ہے۔’
رپورٹ کے مطابق ’امریکہ کا دفاعی بجٹ انڈیا سے 10 گُنا زیادہ ہے جبکہ چین کا دفاعی بجٹ انڈیا کے مقابلے میں چار گُنا زیادہ ہے۔‘