جمعہ‬‮   24   مئی‬‮   2024
 
 

بھارتی ریاست آندھرا پردیش میں1600سے زیادہ کسانوں نے خودکشی کر لی

       
مناظر: 523 | 20 Dec 2022  

امراوتی (نیوز ڈیسک )کیمونسٹ پارٹی آف انڈیا(سی پی آئی) کی ریاستی اکائی نے بتایا ہے کہ بھارتی ریاست آندھرا پردیش میں یوجینا شرمیکا ریتو کانگریس پارٹی حکومت کے اقتدار میں آنے کے بعد سے کم از کم 1,673 کسانوں نے خودکشی کی ہے۔
کشمیر میڈیا سروس کے مطابق سی پی آئی کے ریاستی سیکرٹری کے رام کرشنا نے کہا کہ آندھرا پردیش کے تمام 26 اضلاع میں کسانوں نے زیادہ بارشوں اور جعلی بیجوں کی وجہ سے کافی مقدار میں فصل کھو دی تھی۔ انہوں نے کہا کہ YSRCP حکومت کے اقتدار میں آنے کے بعد سے 1,673 کسانوں نے خودکشی کی تاہم ریاستی حکومت کی جانب سے بہت کم جواب آیا۔
رام کرشنا اور دیگر سی پی آئی لیڈروں کو ریاستی حکومت نے اس وقت گرفتار کیا جب انہوں نے کسانوں کے مسائل پر کلکٹر کو نمائندگی دینے کے لیے اننت پور ضلع کلکٹر کے دفتر میں گھسنے کی کوشش کی۔
بائیں بازو کی پارٹی کے مظاہرے نے ریاستی حکومت سے مطالبہ کیا کہ ان کسانوں کو بچایا جائے جنہوں نے جعلی بیجوں، بے وقت بارشوں اور مناسب کم از کم امدادی قیمت کی کمی کی وجہ سے اپنی فصلیں کھو دی تھیں۔رام کرشنا اور پارٹی کے دیگر رہنما ذاتی مچلکوں پر رہا کیے جانے کے بعد میڈیا سے خطاب کر رہے تھے۔

مقبوضہ کشمیر میں بھارت کی انسانیت دشمنی کی تفصیل
From Jan 1989 till 29 Feb 2024
Total Killings 96,290
Custodial killings 7,327
Civilian arrested 169,429
Structures Arsoned/Destroyed 110,510
Women Widowed 22,973
Children Orphaned 1,07,955
Women gang-raped / Molested 11,263

Feb 2024
Total Killings 0
Custodial killings 0
Civilian arrested 317
Structures Arsoned/Destroyed 0
Women Widowed 0
Children Orphaned 0
Women gang-raped / Molested 0